ناروے میں آمد – کوارنٹین اور ٹیسٹنگ کے اصول

ناروے آنے کے سلسلے میں اب بھی کڑی پابندیاں ہیں۔

سفری ہدایات اور ملک میں داخلے کے اصولوں کا مقصد یہ ہے کہ ناروے میں رہنے والوں کو بیرون ملک سے آنے والے کرونا وائرس انفیکشن سے بچایا جائے اور مسافر انفیکشن کو اپنے ساتھ ناروے میں نہ لائیں۔

نارویجن حکام ایسے تمام بیرون ملک سفروں سے گریز کا مشورہ دیتے ہیں جو انتہائی ضروری نہ ہوں۔ سفر کے سلسلے میں یہ عام ہدایت یورپیئن اکنامک ایریا، سوئٹزرلینڈ، برطانیہ اور یورپیئن یونین کے ان تیسرے ممالک کی فہرست میں شامل دوسرے ملکوں کے لیے نہیں ہے جنہیں نارویجن انسٹی ٹیوٹ آف پبلک ہیلتھ محفوظ سمجھتا ہے (جامنی ممالک)۔ یہاں سفر کے متعلق وزارت خارجہ کی ہدایات پڑھیں (regjeringen.no)۔

یاد رکھیں کہ انفیکشن کی صورتحال بھی اور ملک میں داخلے کے اصول بھی تیزی سے بدل سکتے ہیں۔

آپ کس رنگ کے ملک سے آ رہے ہیں

آپ جس ملک سے آ رہے ہوں، اس کے رنگ سے طے ہوتا ہے کہ آيا آپ سفری کوارنٹین میں جائیں گے اور ناروے میں داخل ہوتے ہوئے کن اصولوں پر عمل کے پابند ہوں گے۔

یہاں تفصیل دیکھیں کہ کن ملکوں کے لیے کونسے رنگ طے ہوئے ہیں (Coronavirus in Norway: Travel advice - helsenorge.no)

اب کن لوگوں کو ناروے میں داخل ہونے کی اجازت ہے؟

آپ اس صورت میں ناروے میں داخل ہو سکتے ہیں کہ آپ:

  • نارویجن شہری ہوں (چاہے آپ کی رہائش کسی بھی ملک میں ہو)
  • غیر ملکی ہوں اور ناروے میں رہتے ہوں
  • کسی ایسے ملک یا علاقے میں رہنے والے غیر ملکی جسے سبز قرار دیا گیا ہو
  • ایسا یورپیئن کرونا سرٹیفکیٹ رکھنے والے غیر ملکی ہوں جو ناروے میں قبول کیا جاتا ہے اور دکھائیں کہ آپ کی ویکسینیشن مکمل ہے یا آپ کو پچھلے چھ مہینوں میں COVID-19 ہو چکا ہے
  • وہ غیر ملکی ہوں جنہیں اپنے بچوں سے ملاقات انجام دینی ہو
  • سویڈن یا فن لینڈ سے روزانہ چھوٹے بچوں کے نگہداشتی ادارے، پرائمری اور ہائی سکول یا اپر سیکنڈری سکول یا کام کے لیے آنے والے غیر ملکی ہوں۔
  • یورپیئن اکنامک ایریا، سوئٹزرلینڈ، برطانیہ یا جامنی ملک میں رہنے والے غیر ملکی ہوں اور
  • ناروے میں رہنے والے افراد کے قریبی اہل خانہ ہوں یعنی:
    • شوہر/بیوی/رجسٹرڈ پارٹنر/بغیر شادی کیے ساتھ رہنے والا
    • نابالغ بچے یا سوتیلے بچے
    • نابالغ بچوں یا سوتیلے بچوں کے والدین یا سوتیلے والدین
    • بالغ اولاد اور سوتیلی اولاد
    • بالغ اولاد/سوتیلی اولاد کے والدین اور سوتیلے والدین
    • دادا دادی، نانا نانی اور سوتیلے دادا دادی اور نانا نانی
    • پوتے پوتیاں اور نواسے نواسیاں اور سوتیلے پوتے پوتیاں اور نواسے نواسیاں
    • وہ غیر ملکی ہوں جو اوپر لکھے ممالک کے علاوہ کسی تیسرے ملک میں رہتے ہوں اور ناروے میں رہنے والے افراد کے قریبی اہل خانہ ہوں یعنی:
    • شوہر یا بیوی
    • بغیر شادی کیے پارٹنر جس کے ساتھ آپ کم از کم دو سال رہ چکے ہوں یا جس کے ساتھ آپ کی اولاد ہونے والی ہے یا اولاد موجود ہے
    • 18 سال سے کم عمر کے بچے یا سوتیلے بچے
    • اگر آپ خود 18 سال سے کم عمر کے بچے ہیں تو والدین یا سوتیلے والدین

  • وہ غیر ملکی ہوں جو اوپر لکھے ممالک کے علاوہ کسی تیسرے ملک میں رہتے ہوں اور ناروے میں رہنے والے افراد کے قریبی اہل خانہ ہوں یعنی:
    • شوہر یا بیوی
    • بغیر شادی کیے پارٹنر جس کے ساتھ آپ کم از کم دو سال رہ چکے ہوں یا جس کے ساتھ آپ کی اولاد ہونے والی ہے یا اولاد موجود ہے
    • 18 سال سے کم عمر کے بچے یا سوتیلے بچے
    • اگر آپ خود 18 سال سے کم عمر کے بچے ہیں تو والدین یا سوتیلے والدین

 

استثناؤں کی مکمل فہرست اور ناروے میں داخلے کے متعلق معلومات کے لیے UDI دیکھیں۔


ان صورتوں میں آپ کو ناروے میں داخل نہیں ہونے دیا جاتا کہ آپ:

  • سیّاح ہوں (یہ سبز ممالک اور علاقوں کے لیے نہیں کہا جا رہا)
  • یورپیئن یونین/یورپیئن اکنامک ایریا کے شہری ہوں (نارڈک ممالک کے شہریوں سمیت) جنہیں ناروے میں کام کرنا ہو یا تعلیم حاصل کرنی ہو اور جنہیں استثنا حاصل نہیں ہے
  • کاروبار کے لیے سفر کرنے والے ہوں
  • وہ غیرملکی ہوں جنہیں شینگن ویزا ملا ہے اور جنہیں استثنا حاصل نہیں ہے
  • ناروے میں تفریحی رہائشگاہ کے مالک ہوں جو یہاں کے رہائشی نہیں ہیں۔

آپ جنہیں ناروے آنے کی اجازت ہے، بنیادی اصول کے طور پر یہ کرنے کے پابند ہیں: 

  • آپ کو سفر کرنے سے پہلے سفری رجسٹریشن کا فارم مکمل کرنا ہو گا
  • آپ کے پاس کرونا وائرس ٹیسٹ کے منفی نتیجے کا ثبوت ہونا ضروری ہے جو آمد سے پہلے کے 24 گھنٹوں کے دوران لیا گيا ہو
  • آپ کو ناروے آنے پر ٹیسٹ کروانا ہو گا
  • آپ کو ناروے آنے کے بعد 10 دن کوارٹین میں رہنا ہو گا

ملک میں داخلے کے اصولوں کی خلاف ورزی ایک قابل سزا جرم ہے۔

ملک میں آنے سے پہلے رجسٹریشن

ناروے میں داخل ہونے والے سب لوگوں کو ملک میں داخلے کا فارم مکمل کرنا ہو گا۔ ڈیجیٹل رجسٹریشن کرنے پر آپ کو ایک رسید ملے گی جو آپ آمد کے وقت پولیس کو دکھائيں گے۔

آپ کو ناروے پہنچنے سے پہلے رجسٹریشن کرنی ہو گی لیکن ضروری ہے کہ رجسٹریشن آمد کے وقت سے پہلے کے 72 گھنٹوں کے اندر اندر ہوئی ہو اور اس سے زیادہ پرانی نہ ہو۔

جن افراد کی ویکسینیشن مکمل ہو یا جنہیں پچھلے چھ مہینوں کے دوران COVID-19 ہو چکا ہو، وہ اس تقاضے سے مستثنی ہیں اور انہیں فارم بھرنے کی ضرورت نہیں۔ ان افراد کو یا تو یہ ثبوت دینا ہو گا کہ ان کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہے یا انہیں نارویجن، ڈینش یا سویڈش کرونا وائرس سرٹیفکیٹ کے ذریعے پچھلے چھ مہینوں کے دوران COVID-19 ہونے کا ثبوت دینا ہو گا (helsenorge.no  پر)۔

رجسٹریشن کیسے کی جاتی ہے؟

ملک میں آمد کی ڈیجیٹل رجسٹریشن کے لنک پر جائیں  (entrynorway.no)

فارم بھرنے میں مدد لینے کے لیے آپ +47 33 41 28 70 پر فون کر سکتے ہیں۔ یا یہاں ای میل کریں:  support@entrynorway.no 

یہ ٹیلیفون سروس ساتوں دن 24 گھنٹے کھلی رہتی ہے۔ صبح 8 بجے سے رات 10 بجے کے درمیان پولش، روسی، لتھوئینین اور رومانیئن زبانوں میں رہنمائی دی جاتی ہے۔

کوارنٹین چیک: دیکھیں کہ آپ کے لیے کونسے اصول واجب ہیں (Helsedirektoratet.no) 

سفر سے پہلے ٹیسٹنگ

منفی COVID-19 ٹیسٹ کا سرٹیفکیٹ

ناروے آنے والوں کو ناروے میں داخل ہوتے ہوئے منفی کرونا وائرس ٹیسٹ کا ثبوت دکھانا ہو گا۔ یہ تقاضا نارویجن شہریوں اور ناروے میں رہنے والوں کے لیے بھی ہے۔

  • ضروری ہے کہ یہ ٹیسٹ ناروے میں آمد سے پہلے کے 24 گھنٹوں کے دوران لیا گیا ہو
  • ٹیسٹنگ کے منظور شدہ طریقے PCR یا اینٹیجن ایکسپریس ٹیسٹ ہیں
  • سرٹیفکیٹ نارویجن، سویڈش، ڈینش، انگلش، فرنچ یا جرمن زبان میں لکھا ہو

اگر آپ ہوائی جہاز سے آ رہے ہیں تو آپ ہوائی سفر کے پہلے حصے میں روانگی کے مقررہ وقت سے پہلے کے 24 گھنٹوں میں لیا گیا ٹیسٹ پیش کر سکتے ہیں۔

مندرجہ ذیل لوگوں کو ناروے میں آمد کے وقت منفی ٹیسٹ کا سرٹیفکیٹ پیش کرنے کی ضرورت نہیں ہے:

  • وہ افراد جن کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہے یا جنہیں پچھلے چھ مہینوں کے دوران COVID-19 ہو چکا ہے اور وہ نارویجن، ڈینش یا سویڈش کرونا وائرس سرٹیفکیٹ کے ذریعے اس کا ثبوت دے سکتے ہیں (no پر)
  • ان ممالک/علاقوں سے آنے والے مسافر جہاں کوارنٹین کی پابندی نہیں ہے
  • 12 سال سے چھوٹے بچے
  • وہ غیر ملکی جن کا آنا نہایت اہم معاشرتی فرائض کی مناسب انجام دہی جاری رکھنے یا عوام کی بنیادی ضروریات پوری کرنے کے لیے لازمی ہو یعنی انہیں داخلے کی اجازت نہ دینے میں زندگی اور صحت کے لیے خطرہ ہو
  • وہ غیر ملکی جو ٹرانزٹ میں ہوں
  • وہ غیر ملکی جو کام یا تعلیم کے لیے باقاعدگی سے سویڈن یا فن لینڈ سے ناروے آتے ہیں اور جو سات دنوں سے زیادہ ناروے سے باہر رہ چکے ہیں۔ سویڈن اور فن لینڈ کے طبی عملے کے لیے سرٹیفکیٹ کے الگ تقاضے ہیں۔
  • پناہ کے درخواست گزار اور ری سیٹلمنٹ پناہ گزین
  • وہ غیر ملکی جنہیں فیملی امیگریشن کے اصولوں کے تحت ناروے میں اقامتی اجازت نامہ ملا ہے
  • ڈپلومیٹک سروس، فارن سروس یا سفارتی کام کرنے والے افراد
  • سامان اور افراد کی ٹرانسپورٹ کا کام کرنے والے غیر ملکی یا جو ایسے کام پر جا رہے ہوں یا واپس آ رہے ہوں
  • کام پر جانے والے یا واپس آنے والے پائلٹ اور بحری جہازوں کا عملہ
  • سویڈن یا فن لینڈ سے روزانہ آنے جانے والے جن کا ہر ساتویں دن کرونا وائرس ٹیسٹ ہوتا ہے اور جو اس کا ثبوت دے سکتے ہوں
  • Svalbard کے مستقل رہائشی
  • سویڈن یا فن لینڈ سے ٹرانزٹ میں آنے والی پولیس اور سویڈن یا فن لینڈ کے کچھ کسٹم اہلکار جو سرکاری کام کر رہے ہوں۔

ملک میں آمد پر لازمی ٹیسٹنگ

یہ ثبوت دکھانے کے ساتھ ساتھ کہ ناروے کا سفر شروع کرنے سے پہلے آپ کا ٹیسٹ منفی آيا تھا،  ناروے آنے پر بھی آپ کو فوراً  COVID-19 کا ٹیسٹ کروانا ہو گا۔ سرحد پر ٹیسٹنگ سٹیشن موجود ہیں۔ ٹیسٹ کا نتیجہ ملنے تک آپ اسی جگہ انتظار کرنے کے پابند ہیں۔ اگر یہ ٹیسٹ مثبت آیا تو آپ آمد کے بعد 24 گھنٹوں کے اندر PCR ٹیسٹ کروائیں گے لیکن اگر آپ پچھلے 10 دن و رات میں یورپیئن اکنامک ایریا اور شینگن ایریا سے باہر وقت گزار چکے ہوں تو آپ کو سرحد پر ہی  PCR ٹیسٹ کروانا ہو گا۔

12 سال سے کم عمر کے بچوں کا ٹیسٹ بھی ہو گا لیکن اگر بچے کے احتجاج وغیرہ کی وجہ سے ٹیسٹ کرنا مشکل ہو تو ٹیسٹ نہیں کیا جائے گا۔

اگر آپ ملک میں آمد پر کسی معقول وجہ کے بغیر ٹیسٹ نہ کروائیں اور اپنی مرضی سے ناروے سے رخصت نہ ہوں تو آپ کو جرمانوں کی سزا ملے گی۔

سرحد پر لازمی ٹیسٹنگ میں کچھ استثنا مہیا ہیں اور ان لوگوں کے لیے ٹیسٹنگ لازمی نہیں ہے:

  • وہ افراد جن کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہے یا جنہیں پچھلے چھ مہینوں کے دوران COVID-19 ہو چکا ہے اور وہ اپنے نارویجن، ڈینش یا سویڈش کرونا وائرس سرٹیفکیٹ میں QR کوڈ کے ذریعے اس کا ثبوت دے سکتے ہیں
  • وہ افراد جو کام کے وقت اور فارغ وقت میں کوارنٹین کی پابندی سے مستثنی ہیں۔
  • سویڈن یا فن لینڈ سے روزانہ تعلیم یا کام کے لیے سرحد پار آنے والے لوگ جنہیں کوارنٹین کی پابندی سے استثنا حاصل ہے
  • لمبے فاصلے کی ٹرانسپورٹ کے پیشہ ور ڈرائیور اور ٹرین کا عملہ جو مال گاڑی پر کام نہیں کرتا
  • وہ افراد جو نہایت اہم معاشرتی فرائض کی مناسب انجام دہی جاری رکھنے یا عوام کی بنیادی ضروریات پوری کرنے کے لیے لازمی ہیں، جب ٹیسٹنگ انجام دینا عملاً ممکن نہ ہو۔

سفری کوارنٹین (ملک میں آمد پر کوارنٹین)

سرخ ممالک یا علاقوں سے ناروے آنے والے سب افراد کو اپنی آمد کے دن سے لے کر 10 دن اور راتیں کوارنٹین میں رہنا ہو گا۔ اسے سفری کوارنٹین کہا جاتا ہے۔

جن لوگوں کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہے، جنہیں پچھلے چھ مہینوں کے دوران COVID-19 ہو چکا ہے اور جو سبز ممالک یا علاقوں سے آ رہے ہوں، انہیں سفری کوارنٹین سے استثنا حاصل ہے۔ اس کے لیے انہیں helsenorge.no پر نارویجن کرونا وائرس سرٹیفکیٹ کے ذریعے اس کا ثبوت دینا ہو گا۔

آپ سفری کوارنٹین کہاں مکمل کریں گے، یہ اس پر منحصر ہو گا کہ آپ کس ملک یا علاقے سے ناروے آ رہے ہیں۔ 

یورپ میں سرخ اور پیلے ممالک اور علاقوں کا نقشہ (صرف انگلش میں)

سفری کوارنٹین (ملک میں آمد پر کوارنٹین) میں ایسے رہا جائے

 اگر آپ سفری کوارنٹین میں ہیں تو آپ:

  • کوارنٹین ہوٹل میں رہیں گے یا اگر آپ کو استثنا حاصل ہے تو کسی اور مناسب جگہ پر کوارنٹین پوری کریں گے
  • کام پر، سکول یا چھوٹے بچوں کے نگہداشتی ادارے میں نہیں جائیں گے
  • ملک کے اندر سفر نہیں کریں گے
  • ایسی جگہوں پر نہیں جائیں گے جہاں دوسرے لوگوں سے ضروری فاصلہ رکھنا مشکل ہو
  • پبلک ٹرانسپورٹ استعمال نہیں کریں گے۔ یورپیئن اکنامک زون، سوئٹزرلینڈ یا برطانیہ سے آنے والے لوگ کوارنٹین کے مقام تک پبلک ٹرانسپورٹ لے سکتے ہیں یا کوارنٹین ختم ہونے سے پہلے ناروے سے چلے جانے کی صورت میں کوارنٹین کا مقام چھوڑنے کے لیے پبلک ٹرانسپورٹ لے سکتے ہیں۔ اس صورت میں 12 سال سے زیادہ عمر کے افراد کو چہرے پر ماسک پہننا ہو گا
  • عوامی مقامات پر جیسے دکانوں، فارمیسی یا کیفے میں نہیں جائیں گے۔ اگر آپ کے پاس کوئی اور حل نہ ہو تو آپ ضروری کام کے لیے دکان یا فارمیسی میں جا سکتے ہیں۔ دوسرے لوگوں سے خوب فاصلہ رکھنے کا بندوبست کریں
  • کسی ملاقاتی سے نہیں ملیں گے۔ بچے اپنے گھر میں رہنے والوں کے علاوہ کسی اور کے ساتھ نہیں کھیلیں گے۔

آپ باہر پیدل چلنے جا سکتے ہیں لیکن دوسرے لوگوں سے خوب فاصلہ رکھیں۔ بچوں اور نوجوانوں کو باہر کھیلنے کا موقع ملنا چاہیے۔

اگر کوارنٹین میں رہنے کے دوران آپ میں COVID-19 کی علامات ظاہر ہو جائیں تو آپ آئسولیشن اختیار کریں گے اور ٹیسٹ کروانے کے لیے مقامی ہیلتھ سروس سے رابطہ کریں گے۔ فون نمبر 116117ہے۔

سفری کوارنٹین (ملک میں آمد پر کوارنٹین) سے استثنا

مندرجہ ذیل گروہوں/مقاصد کو سفری کوارنٹین سے استثنا حاصل ہے:

  • سبز ممالک سے آنے والے تمام افراد۔
  • وہ افراد جن کی ویکسینیشن مکمل ہے اور وہ افراد جنہیں COVID-19 ہو چکا ہے۔ یہی اصول ڈینش یا سویڈش کرونا وائرس سرٹیفکیٹ رکھنے والوں کے لیے بھی ہے۔
  • والدین اور بچوں کے درمیان ملاقات اور بچے کی رہائش دو جگہوں پر ہونا
  • سویڈن اور فن لینڈ میں جائیداد کی نہایت ضروری مرمّت اور دیکھ بھال
  • قریبی عزیزوں کی شدید بیماری اور جنازہ

کام کے سلسلے میں بھی کچھ استثنا واجب ہیں۔

مندرجہ ذیل افراد کام کے وقت میں اور فارغ وقت میں بھی سفری کوارنٹین سے مستثنی ہیں:

  1. وہ لوگ جو کوارنٹین کی پابندی والے کسی علاقے سے گزر کر پبلک ٹرانسپورٹ استعمال کیے بغیر، وہاں رات گزارے بغیر اور اپنے ساتھ رہنے والوں کے علاوہ کسی اور سے قریبی واسطے کے بغیر ناروے آ رہے ہوں۔
  2. وہ لوگ جو سویڈن یا فن لینڈ میں مکان جیسی جائیداد، کشتی، کیمپنگ کاروان وغیرہ کی ضروری مرمت اور دیکھ بھال انجام دینے کے بعد ناروے آ رہے ہوں، اور انہوں نے نہ پبلک ٹرانسپورٹ استعمال کی ہو، نہ وہاں رات گزاری ہو اور نہ ان کا اپنے ساتھ رہنے والوں کے علاوہ کسی اور سے قریبی واسطہ رہا ہو۔
  3. وہ لوگ جو ناروے میں کشتی میں سوار ہوئے ہوں اور ناروے واپس آنے تک صرف اسی کشتی میں رہے ہوں۔ دوسرے مسافر یا غیر ملکی بندرگاہ پر خشکی پر اترنے والا عملہ اس کشتی میں سوار نہ ہوئے ہوں، سوائے ان افراد کے جو اشیاء کی ٹرانسپورٹ انجام دے رہے ہوں بشرطیکہ وہ دوسرے مسافروں اور عملے سے قریبی واسطے سے بچتے رہے ہوں۔

ہوائی جہازوں اور ٹرینوں کا وہ عملہ جو اپنا کام ناروے میں شروع کرے اور جو ہوائی جہاز یا ٹرین سے نکلے بغیر بیرون ملک سفر کرے۔ اگر آپ ہوائی جہاز یا ٹرین سے اترے ہوں تو آپ کو ناروے آمد پر اپنا  ٹیسٹ کروانا ہو گا (ہوائی جہازوں کا عملہ) یا پہلے 24 گھنٹوں میں ٹیسٹ کروانا ہو گا (ٹرینوں کا عملہ) اور اس کے بعد ہر ساتویں دن ٹیسٹ کروانا ہو گا۔

کوارنٹین کے عرصے میں کمی

سفری کوارنٹین کرنے والے سب لوگ آمد کے سات دن بعد PCR ٹیسٹ کروائیں گے۔ یہ ٹیسٹ کروانے کے لیے بلدیہ یا کسی ٹیسٹنگ سنٹر سے رابطہ کریں۔ اگر آپ کوارنٹین ہوٹل میں ہوں تو بلدیہ یہ ٹیسٹ فراہم کرے گی۔ اس ٹیسٹ کا نتیجہ منفی آنے تک آپ پر کوارنٹین کی پابندی واجب رہے گی۔

جن افراد کو ویکسین کی ایک ڈوز کے ذریعے تحفظ مل چکا ہو اور 12 سال سے کم عمر کے بچے منفی ٹیسٹ کی صورت میں سات دن کی بجائے تین دن بعد سفری کوارنٹین ختم کر سکیں گے۔ تحفظ رکھنے والا فرد ہونے کا ثبوت Helsenorge.no سے دینا ضروری ہے، کرونا وائرس سرٹیفکیٹ کے ذریعے اور QR کوڈ دکھا کر۔

تحفظ رکھنے والوں سے مراد یہ ہے:

  • وہ لوگ جن کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہے
  • وہ لوگ جن کی ویکسین کی پہلی ڈوز کو 3 ہفتے سے زیادہ گزر چکے ہیں
  • وہ لوگ جنہیں پچھلے 6 مہینوں میں COVID-19 ہو چکا ہے۔

کوارنٹین ہوٹل یا گھر میں یا کسی اور مناسب جگہ پر سفری کوارنٹین؟

آپ ملک میں آمد پر کوارنٹین کہاں مکمل کریں گے، یہ اس پر منحصر ہے کہ آپ کس ملک یا علاقے سے ناروے آئے ہیں۔ اگر آپ اوپر درج گروہوں میں سے کسی گروہ سے تعلق رکھتے ہوں یا اگر آپ کے آجر نے پہلے سے منظور شدہ قیامگاہ کا انتظام کیا ہو تو آپ کو ہوٹل کوارنٹین سے استثنا مل سکتا ہے۔

قریبی افراد خاندان (شوہر/بیوی، بغیر شادی کیے ساتھ رہنے والے اور ان کے بچے) جو وطن میں اکٹھے رہتے ہوں اور اکٹھے ناروے آئے ہوں، وہ سفری کوارنٹین کے لیے ایک ہی قیامگاہ میں رہ سکتے ہیں۔

یورپیئن اکنامک ایریا اور سوئٹزرلینڈ سے باہر کے ممالک

اگر ناروے میں داخل ہونے سے پہلے کے 10 دنوں میں آپ یورپیئن اکنامک ایریا یا سوئٹزرلینڈ سے باہر کے کسی ملک میں وقت گزار چکے ہوں تو آپ کو سفری کوارنٹین کا کچھ حصہ کوارنٹین ہوٹل میں گزارنا پڑے گا۔ آپ کو تب تک کوارٹین ہوٹل میں رہنا ہو گا کہ آپ کی ملک میں آمد کے جلد از جلد 3 دن بعد ہونے والے PCR ٹیسٹ کا نتیجہ آ جائے۔ اگر نتیجہ منفی ہو تو آپ  ہوٹل سے نکل کر کوارنٹین پوری کرنے کے لیے گھر یا کسی اور مناسب قیامگاہ میں جا سکتے ہیں۔ مناسب قیامگاہ وہ ہے جہاں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہو اور جہاں آپ کا الگ کمرہ، الگ غسلخانہ اور الگ باورچی خانہ یا کھانا منگوانے کا انتظام ہو۔

یورپیئن اکنامک ایریا کے ممالک اور سوئٹزرلینڈ

اگر آپ یورپیئن اکنامک ایریا یا سوئٹزرلینڈ میں ٹھہر چکے ہوں تو آپ کو کوارنٹین ہوٹل میں رہنے کی ضرورت نہیں۔ اس کے لیے آپ کو یہ ثبوت دکھانا ہو گا کہ ناروے میں داخل ہونے سے پہلے کے 10 دنوں میں آپ یورپیئن اکنامک ایریا اور سوئٹزرلینڈ سے باہر کے کسی ملک میں نہیں ٹھہرے ہیں۔ آپ کے پاس اپنا گھر یا کوئی اور مناسب قیامگاہ ہونا ضروری ہے جہاں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہو اور جہاں آپ کا الگ کمرہ، الگ غسلخانہ اور الگ باورچی خانہ یا کھانا منگوانے کا انتظام ہو۔

برطانیہ کے لیے خاص اصول

21 جون سے برطانیہ سے آنے والے کوارنٹین ہوٹل میں رہنے کے پابند ہوں گے۔

کوارنٹین ہوٹل

جب آپ ناروے آئیں تو بنیادی اصول کے طور پر آپ کو کوارنٹین ہوٹل میں رہنا ہو گا۔ اگر آپ کو استثنا حاصل ہے تو آپ کو ملک میں آمد کے وقت اس کا ثبوت دکھانا ہو گا ۔ کوارنٹین ہوٹل کے متعلق معلومات آپ کو سرحدی کراسنگز اور ناروے میں داخلے کے مقامات پر موجود پولیس سے مل سکتی ہیں۔

آپ کو ہوٹل میں قیام کا خرچ خود اٹھانا ہو گا۔ یہاں آپ کو کم از کم سات دن رہنا ہو گا۔دن 3 پر آپ دوبارہ COVID-19 ٹیسٹ کروا سکتے ہیں۔ اس ٹیسٹ کا منفی نتیجہ آنے کی صورت میں آپ ہوٹل سے جا کر اپنے گھر یا کسی اور مناسب قیامگاہ میں کوارنٹین پوری کر سکتے ہیں۔

جو نابالغ بچے اکیلے ناروے آئیں، وہ کوارنٹین ہوٹل میں رہنے کے پابند نہیں ہیں۔

کوارنٹین ہوٹل میں قیام کے اخراجات

کوارنٹین ہوٹل میں 18 سال سے زیادہ عمر کے پرائیویٹ افراد اور آجروں کے لیے یومیہ فیس 500 کرونر ہے۔ سرپرستوں کے کمرے میں رہنے والے 10 سال سے کم عمر کے بچے ہوٹل میں مفت ٹھہرتے ہیں۔ 10 سے 18 سال عمر کے بچوں کے لیے یومیہ فیس 250 کرونر ہے۔ یہ فیس کوارنٹین ہوٹل میں عام بل کی طرح ادا کی جائے گی یعنی آمد کے وقت یا ہوٹل چھوڑنے سے پہلے۔

کوارنٹین ہوٹل میں مفت COVID-19 ٹیسٹنگ کا انتظام ہے۔

 کوارنٹین ہوٹل سے استثنا

کچھ گروہوں کو کوارنٹین ہوٹل میں قیام سے استثنا مل سکتا ہے۔ اس بارے میں اصول کہ کون لوگ استثنا کی درخواست دے سکتے ہیں، نارویجن ڈائریکٹوریٹ آف امیگریشن (Utlendingsdirektoratet) کی ویب سائیٹ پر یہاں موجود ہیں:About the corona situation - UDI 

اس لنک پر استثنا کی درخواست دیں https://www.udi.no/en/quarantine-hotel

چاہے آپ کو کوارنٹین ہوٹل سے استثنا مل سکتا ہو، آپ کو ناروے آنے پر کوارنٹین، ٹیسٹنگ اور رجسٹریشن کے اصولوں پر عمل کرنا ہو گا۔

اگر آپ ان میں سے کسی گروہ سے تعلق رکھتے ہیں تو آپ اپنے گھر یا کسی اور اور مناسب قیامگاہ میں کوارنٹین پوری کر سکتے ہیں:

  • آپ یورپیئن اکنامک ایریا کے کسی ملک یا سوئٹزرلینڈ سے آ رہے ہوں
  • آپ helsenorge.no پر ثبوت دے سکتے ہوں کہ آپ محفوظ ہیں اور آپ کے پاس اپنا گھر یا کوئی اور مناسب قیامگاہ ہے جہاں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہے اور جہاں آپ کا الگ کمرہ، الگ غسلخانہ اور الگ باورچی خانہ یا کھانا منگوانے کا انتظام ہے۔
  • نابالغ بچے
  • آپ ثابت کر سکتے ہوں کہ آپ کا آجر نارویجن لیبر انسپیکشن اتھارٹی (Arbeidstilsynet) سے قیامگاہ کی منظوری پا چکا ہے۔ آپ منظوری کی کاپی جیسا کوئی ثبوت دکھا سکتے ہوں۔
  • آپ اہم فلاحی وجوہ یا دیگر بہت اہم وجوہ کی موجودگی ثابت کر سکتے ہوں (نیچے مزید وضاحت دیکھیں) اور آپ کسی اور مناسب قیامگاہ میں کوارنٹین کر سکتے ہوں جہاں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہو۔ آپ کو نارویجن ڈائریکٹوریٹ آف امیگریشن کو استثنا کی درخواست دینی ہو گی
  • آپ پناہ کے درخواست گزار یا ری سیٹلمنٹ پناہ گزین ہوں
  • آپ والدین اور بچوں کے درمیان طے شدہ ملاقات یا قانوناً مقرر ملاقات انجام دینے کے لیے آ رہے ہوں یا جب بچوں کے قانون اور تحفظ بچگان کے قانون کے تحت بچے باری باری ماں اور باپ کے پاس رہتے ہوں۔ اس گروہ کو کوارنٹین ہوٹل سے استثنا لینے کے لیے UDI کو درخواست دینے کی ضرورت نہیں ہے۔
  • آپ کام یا تعلیم کے سلسلے میں باقاعدگی سے سویڈن یا فن لینڈ سے سرحد پار کر کے آتے ہوں اور آپ کو COVID-19 ضابطے کے سیکشن 6b کے تحت کوارنٹین کی پابندی سے استثنا حاصل ہو۔

 اپنا گھر یا کوئی اور مناسب قیامگاہ

جن لوگوں کو کوارنٹین ہوٹل میں قیام سے استثنا حاصل ہے، ان کے کوارنٹین کرنے کے لیے مناسب قیامگاہیں یہ ہیں:

  • اپنا گھر یا کوئی اور مناسب قیامگاہ جہاں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہو اور جہاں ان کا الگ کمرہ، الگ غسلخانہ اور الگ باورچی خانہ یا کھانا منگوانے کا انتظام ہو۔ دوسری مناسب قیامگاہ، اگر آپ ملک میں آمد کے وقت ایسی اہم فلاحی وجوہ کا ثبوت دے سکتے ہوں جن کی بنیاد پر آپ کا اس جگہ رہنا ضروری ہو۔ آپ کو یہ ثابت کرنے کے قابل بھی ہونا چاہیے کہ یہ جگہ کوارنٹین قیام کے لیے مناسب ہے۔ اس فہرست کے نیچے مناسب قیامگاہ کی وضاحت پڑھیں۔
  • ایسی مناسب قیامگاہ جس کا انتظام آجر کرے۔ یہ ضروری ہے کہ آجر ملازم/کارکن کی ملک میں آمد سے پہلے نارویجن لیبر انسپیکشن اتھارٹی (Arbeidstilsynet) سے قیامگاہ کی منظوری پا چکا ہو۔ آپ کو ملک میں آمد کے وقت اس منظوری کا ثبوت دینے کے قابل ہونا چاہیے۔

مناسب قیامگاہ: ایک مناسب قیامگاہ میں دوسرے لوگوں سے قریبی واسطے سے بچنا ممکن ہوتا ہے، الگ کمرہ، الگ غسلخانہ اور الگ باورچی خانہ یا کھانا منگوانے کا انتظام ہوتا ہے۔ سفری رجسٹریشن کے لازمی فارم میں آپ یہ تصدیق نامہ منسلک کریں گے کہ قیامگاہ کوارنٹین مکمل کرنے کے تقاضے پورے کرتی ہے۔

ملک میں آنے والوں کے لیے نیشنل کنٹرول سنٹر

ناروے آنے والے مسافروں سے 'ملک میں آنے والوں کے لیے نیشنل کنٹرول سنٹر' کوارنٹین کے عرصے میں ایس ایم ایس اور فون پر رابطہ کرے گا۔

اگر کنٹرول سنٹر کا آپ سے رابطہ نہ ہو سکا تو اس کی اطلاع بلدیہ کے چیف میڈیکل آفیسر یا نارویجن لیبر انسپیکشن اتھارٹی کو دی جا سکتی ہے۔ کنٹرول سنٹر کو آپ کے متعلق معلومات ملک میں آمد کے رجسٹر سے ملتی ہیں۔

یہ اہم ہے کہ اگر اس نمبر سے آپ کو کال آئے تو آپ فون ضرور اٹھائیں 2189xxxx

ملازمین/کارکنوں اور روزانہ سفر کرنے والوں کے لیے ملک میں آمد پر کوارنٹین

غیر ملکی ملازمین/کارکن کوارنٹین ہوٹل میں کوارنٹین مکمل کریں گے، سوائے اس کے کہ ان کی قیامگاہ پہلے سے منظور ہو چکی ہو۔ کوارنٹین کی پابندی کے تحت ممالک سے ناروے آنے والے سب لوگ:

  • 10 دن کوارنٹین میں گزاریں گے اور اس کے بعد ہی وہ کام کرنا شروع کر سکتے ہیں
  • اوپر بیان کردہ طریقے سے، کرونا وائرس ٹیسٹ کا منفی نتیجہ آنے پر سفری کوارنٹین کا عرصہ کم کر سکتے ہیں۔

ان افراد کے لیے کام کے وقت میں استثنا جو اکثر ملک کی سرحد پار کرتے ہیں

  • وہ طبی عملہ جس کی ویکسینیشن مکمل ہو چکی ہو، جو ہسپتال یا بلدیاتی ہیلتھ سروس میں نہایت اہم فرائض انجام دیتا ہو، کام کے وقت میں کوارنٹین سے استثنا رکھتا ہے بشرطیکہ ناروے میں آمد پر ان کا ٹیسٹ منفی آئے۔
  • لمبے سفر کی ٹرانسپورٹ کے پیشہ ور ڈرائیوروں، ٹرین کے عملے اور ہوائی جہازوں کے عملے میں سے کچھ کو اور جن کارکنوں کو کام کرنے کے لیے نارویجن بندرگاہ پر کھڑے بحری جہاز میں جانا ہو، انہیں کام کے وقت میں سفری کوارنٹین سے استثنا مل سکتا ہے۔ ان لوگوں کو اپنے آجر سے رابطہ کر کے وضاحت حاصل کرنی چاہیے کہ ان کے لیے کیا واجب ہے۔
  • سویڈن یا فن لینڈ سے ٹرانزٹ میں آنے والی پولیس اور سویڈن یا فن لینڈ کے کچھ کسٹم اہلکار جو سرکاری کام کر رہے ہوں، وہ بھی کام کے وقت میں کوارنٹین سے مستثنی ہیں۔
  • وہ اکثر سفر کرنے والے لوگ جو 15 دنوں کے عرصے میں ایک بار سے زیادہ سویڈن یا فن لینڈ سے سرحد پار کر کے ناروے آتے ہیں، کام کے وقت میں کوارنٹین سے استثنا حاصل کر سکتے ہیں بشرطیکہ وہ اس طرح اپنا ٹیسٹ کروائیں:
  1. کم از کم ہر ساتویں دن

یا

  1. ناروے آنے کے پہلے دن، اور پھر ہر ساتویں دن، اگر آپ کو ناروے میں ٹیسٹ کروائے ہوئے سات دن سے زیادہ گزر چکے ہوں

یا

  1. سویڈن یا فن لینڈ میں کروائے گئے آخری COVID-19 ٹیسٹ کے بعد سات دنوں کے دوران (یہ اصول صرف روزانہ سفر کرنے والوں کے لیے ہے)

اگر ناروے میں آمد سے پہلے کے 10 دنوں میں آپ سویڈن یا فن لینڈ کے علاوہ کسی اور ملک میں وقت گزار چکے ہوں یا اگر آپ ساتھ ساتھ سویڈن یا فن لینڈ کے صحت و نگہداشت کے نظام میں بھی کام کرتے ہوں تو آپ کو استثنا نہیں مل سکتا۔

مزید تفصیل پڑھیں (صرف انگلش میں)

اہم فلاحی وجوہ نیز سفری کوارنٹین کو متاثر کر سکنے والے حالات کی وجہ سے سفری کوارنٹین سے استثنا

بعض  صورتوں میں آپ کو سفری کوارنٹین کی پابندی سے استثنا مل سکتا ہے:

  • اپنے کسی پیارے شدید بیمار شخص سے ملنے یا اپنے پیارے کے جنازے یا تدفین میں شریک ہونے کے لیے۔ کوارنٹین سے استثنا صرف اس وقت کے لیے ہو گا جب آپ بیمار سے مل رہے ہوں یا جنازے/تدفین میں شریک ہوں۔ اس کے علاوہ کوارنٹین کا اطلاق ہو گا۔ استثنا صرف تب ملتا ہے جب سرحد پر آپ کے ٹیسٹ کا نتیجہ منفی آئے اور ملاقات یا جنازے/تدفین میں آپ کی شرکت اسی دن ہو۔ اس صورت میں آپ کو ٹیسٹ کی فیس خود ادا کرنی ہو گی۔
  • اگر آپ کو بچوں کے قانون یا تحفظ بچگان کے قانون کے تحت بچوں سے ملاقات کا معاہدہ حاصل ہو:
  1. جب آپ ناروے آئیں تو آپ کو سفری کوارنٹین سے استثنا نہیں ملتا لیکن آپ کوارنٹین کے عرصے میں اپنے بچوں کے ساتھ رہ سکتے ہیں۔ آمد کے بعد دن 3 اور دن 7 پر ٹیسٹ (PCR) کروانا لازمی ہے۔
  2. اگر آپ بیرون ملک رہنے والے اپنے بچوں کے ساتھ وقت گزارنے کے لیے گئے تھے تو آپ کو ناروے میں آمد پر سفری کوارنٹین سے استثنا مل سکتا ہے۔ یہ اصول صرف تب واجب ہے جب ناروے میں آمد کے بعد جلد از جلد دن 3 پر آپ کے ٹیسٹ(PCR) کا نتیجہ منفی آئے۔ اگر آپ کے پاس ناروے میں ملازمت نہیں ہے تو آپ کام کے وقت میں کوارنٹین سے استثنا نہیں لے سکتے۔
  3. ملک سے باہر والد یا والدہ کے ساتھ وقت گزار کر آنے والا آپ کا بچہ ناروے میں آمد کے بعد جلد از جلد دن 3 پر کروائے گئے ٹیسٹ(PCR) کا منفی نتیجہ آنے پر سکول کے وقت میں کوارنٹین سے استثنا لے سکتا ہے۔ 12 سال سے کم عمر کے بچوں کو کوارنٹین سے چھوٹ حاصل ہے چاہے ان کا ٹیسٹ نہ ہوا ہو۔

اگر آپ ثابت کر سکتے ہوں کہ آپ بچوں کے قانون یا تحفظ بچگان کے قانون کے تحت بچوں کے ساتھ طے شدہ یا قانوناً مقررہ ملاقات کے لیے ناروے کی سرحد پار کر رہے ہیں تو آپ مناسب قیامگاہ میں کوارنٹین مکمل کر سکتے ہیں۔ اس صورت میں آپ کا الگ کمرہ، الگ غسلخانہ یا باورچی خانہ ہونا ضروری نہیں ہے۔

اگر آپ کو کوارنٹین سے استثنا ملا ہو اور آپ میں COVID-19 کی علامات ظاہر ہو جائیں یا ڈاکٹر کی رائے میں آپ کو COVID-19 انفیکشن کا شبہ ہو تو آپ کو بہرحال کوارنٹین میں جانا پڑے گا۔

یہاں آپ کو کئی زبانوں میں کرونا وائرس کے متعلق مزید معلومات ملیں گی (regjeringen.no)